Sunday, 1 February 2015

Ubqari February 2015 Online Read

Ubqari Magazine February 2015

  عبقری فروری 2015

عبقری کا پیغام انسان اور انسانیت ہے

1ST VIDEO OF HAKEEM TARIQ MEHMOOD



Tital Page Ubqari Magazine February 2015

Ubqari Magazine February 2015

 



Page No.2 Ubqari Magazine February 2015
Ubqari Magazine February 2015

 



ایک دیہاتی کا نہایت عمدہ سوال اور نبی کریم ﷺ کا نہایت عمدہ جواب  

حضرت ابوایوب رضی اللہ تعالیٰ عنہٗ بیان کرتے ہیں کہ رسول اللہ ﷺ ایک سفر میں تھے کہ ایک دیہاتی سامنے آکھڑا ہوا اور اُس نے آپ ﷺ کی اونٹنی کی مہار پکڑلی‘ پھر کہا اے اللہ کے رسول ﷺ! مجھے وہ بات بتائیں جو مجھے جنت سے قریب اور آتش دوزخ سےدور کردے؟ راوی کا بیان ہے کہ نبی کریم ﷺ ٹھہرگئے‘ پھر اپنے رُفقاء کی طرف آپ ﷺ نے دیکھ اور (ان کو متوجہ کرتے ہوئے) ارشاد فرمایا: ’’اس کو اچھی توفیق ملی۔۔۔ یا فرمایا: اس کو خوب ہدایت ملی۔۔۔۔ پھر آپﷺ نے اس دیہاتی سے فرمایا: ہاں! ذرا پھر کہنا! تم نے کس طرح کہا: سائل نے اپنا وہی سوال پھر دہرایا۔ تو نبی کریم ﷺ نے ارشاد فرمایا: ’’صرف اللہ کی بندگی کرتے رہو اور کسی چیز کو اس کے ساتھ شریک نہ کرو‘ نماز قائم کرتے رہو‘ زکوٰۃ ادا کرتے رہو اور صلہ رحمی کرتے رہو۔ اب اونٹنی کی مہار چھوڑ دو۔‘‘ (مسلم شریف)مسلم شریف ہی کی اسی حدیث کی دوسری روایت کے آخر میں ایک فقرہ یہ بھی ہے کہ: جب وہ دیہاتی چلا گیا تو آنحضرت ﷺ نے فرمایا کہ اگر یہ مضبوطی سے ان احکام پر عمل کرتا رہا تو یقیناً جنت میں جائے گا۔ اللہ تعالیٰ تمام مسلمانوں کو آنحضرت ﷺ کی اس وصیت پر عمل کرنے کی توفیق اور جنت نصیب فرمائے! آمین یارب العالمین!فائدہ: اس حدیث سے آنحضرت ﷺ کی شفقت پیغمبرانہ کا کچھ اندازہ کیا جاسکتا ہے کہ آپﷺ سفر میں ہیں‘ اونٹنی پر سوار چلے جارہے ہیں‘ اثنائے راہ میں ایک بالکل ناآشنا دیہاتی سامنے آکر اچانک اونٹنی کی مہار پکڑ کر کھڑا ہوجاتا ہے اور سوال پوچھتا ہے۔ آپ ﷺ اُس کے اس طرز عمل سے ناراض نہیں ہوتے بلکہ اس کی دینی حرص کی ہمت افزائی فرماتے ہیں اور جواب دینے کے بعد آخر میں فرماتے ہیں: اچھا! اب ہماری اونٹنی کی مہار چھوڑ دو۔ اللہ اکبر! پیغمبری کیا ہے! شفقت و رحمت کا ایک مجسم پیکر ہے۔

 

Page No.3 Ubqari Magazine February 2015

February 2015 Ubqari Magazine

Page No.4 Ubqari Magazine February 2015

Page 4 Ubqari Magazine February 2015


 دس ہزار مرتبہ درود پڑھنے کے برابرثواب   اَللّٰھُمَّ صَلِّ عَلٰی مُحَمَّدٍ اَفْضَلَ صَلَوَاتِکَ۔ اس درود پاک کےبارے میں منقول ہے کہ اس کا ایک مرتبہ پڑھنا دس ہزار مرتبہ درود پاک پڑھنے کے برابر ہے۔ (بحوالہ: ذریعۃ الوصول الی جناب الرسول ﷺ‘ ص150

   Page No.5 Ubqari Magazine February 2015

February 2015 Ubqari Magazine


Page No.6 Ubqari Magazine February 2015

Ubqari Magazine February 2015


 شوگر اور ہائی بلڈپریشر کنٹرول   محترم حکیم صاحب السلام علیکم! اللہ آپ کو خوش و خرم رکھے اور عمر دراز کرے‘ گزارش ہے کہ میں ایک گنہگار آدمی ہوں‘ خوش قسمتی سے میں نے آپ کا درس نیٹ پر سنا تو اللہ تعالیٰ نے مجھے اور میری بیوی کو نمازی بنادیا ہے اور ہم باقاعدگی سے روزانہ نیٹ پر آپ کے درس سنتے ہیں اور آپ کی دعاؤں سے ہمارے گھر میں بہت برکت آئی ہے۔ہم میاں بیوی اور میرا بیٹا سیدھے راستے پر چل پڑے ہیں۔محترم حکیم صاحب! میں ہائی بلڈپریشر اور شوگر کا مریض ہوں‘ میری شوگر اور بلڈپریشر کنٹرول میں نہیں رہتا تھا مگر جب سے میں نے میٹھا سوڈا‘ سونٹھ اور دارچینی ہم وزن کا سفوف بنا کر استعمال کرنا شروع کیا ہے ‘ پہلے سے کافی بہتر ہوں‘صبح و شام آدھا چمچ چائے والا سے اب میری شوگر اور بلڈپریشر کنٹرول میں رہتا ہے۔مزید بہتری کیلئے دعا فرمائیں۔(محمدارشد‘ انگلینڈ)۔

Page No.7 Ubqari Magazine February 2015

Ubqari February 2015


Page No.8 Ubqari Magazine February 2015

Ubqari Magazine February 2015


Page No.9 Ubqari Magazine February 2015

Ubqari Magazine February 2015



Page No.10 Ubqari Magazine February 2015

Ubqari Magazine February 2015


Page No.11 Ubqari Magazine February 2015

Ubqari Magazine February 2015


Page No.12 Ubqari Magazine February 2015


Ubqari Magazine February 2015


Page No.13 Ubqari Magazine February 2015

Ubqari Magazine February 2015 Page 13


Page No.14 Ubqari Magazine February 2015
Page 14 Ubqari Magazine February 2015


Page No.15 Ubqari Magazine February 2015

February 2015 Ubqari Magazine




احَفِیْظُ یَاسَلَامُ نے دیارغیرمیں بچالیا  

میں قصبہ دیوبند میں تھی کہ اچانک بابری مسجد کا ہنگامہ کھڑا ہوگیا۔ وہ دسمبر کی ایک خنک رات تھی اور کوئی ساڑھے گیارہ بجے تھے کہ میرے چچا گھبرائے ہوئے ہم لوگوں کے پاس آئے۔ (ہم سب ایک کمرے میں بیٹھے باتیں کررہے تھے اور لڈو کھیل رہے تھے) کہ غضب ہوگیا ہے
نگہت عائشہ‘ کراچی

محترم حکیم صاحب السلام علیکم! تقریباً دو سال پہلے عبقری سے تعارف ہوا اور یہ تعارف اتنا خوبصورت تھا کہ دائمی دوستی اور رفاقت میں بدل چکا ہے‘ جو کام آپ مخلوق خدا کیلئے کررہے ہیں اس کا اجر دینے والی ذات صرف اللہ تعالیٰ کی ہے۔ ہم صرف تحسین و آفرین پیش کرسکتے ہیں اور آپ کیلئے دعاگو ہیں۔ آپ فرماتے ہیں کہ ہم بھی کچھ قیمتی باتیں شیئر کیا کریں۔ چنانچہ میں آج آپ کو اپنی زندگی کا سب سے بڑا واقعہ اور اس سنگین صورتحال سے محفوظ نکلنے والا مجرب نسخہ لیکر حاضر ہوئی ہوں۔
یہ 1992ء کی بات ہے جب میں انڈیا گئی جس روز میں وہاں پہنچی وہ دیوالی کی رات تھی۔ خیر میں اپنے خالہ زاد بھائی کے ہاں مقیم ہوئی‘ رات کا کھانا کھا کر بھابی نے کہا چلو چھت پر آتش بازی دیکھتے ہیں مگر مجھے کوئی دلچسپی نہ تھی‘ پھر اصرار کیا کہ اگلی گلی میں ماموں کے ہاں چلتے ہیں‘ میں ڈر رہی تھی میں نے کہا کہ مجھے آتش بازی سے ڈر لگتا ہے‘ راستے میں کہیں کچھ آکر نہ گرجائے۔ مگر وہ زبردستی یہ کہہ کر گھسیٹ لے گئیں کہ بسیاحَفِیْظُ یَاسَلَامُ کا ورد کرتے چلیں گے پھر کچھ نہیں ہوگا۔ چنانچہ ہم آتش بازی کے اس سیلاب سے ہوکر واپس خیریت سے گھر پہنچ گئے۔ انہوں نے کہا کہ اس ورد میں بڑی طاقت ہے۔ خیر پھر میں سہارنپور اپنے ددھیال والوں سے ملنے چلی گئی۔ میں قصبہ دیوبند میں تھی کہ اچانک بابری مسجد کا ہنگامہ کھڑا ہوگیا۔ وہ دسمبر کی ایک خنک رات تھی اور کوئی ساڑھے گیارہ بجے تھے کہ میرے چچا گھبرائے ہوئے ہم لوگوں کے پاس آئے۔ (ہم سب ایک کمرے میں بیٹھے باتیں کررہے تھے اور لڈو کھیل رہے تھے) کہ غضب ہوگیا ہے باہر بلوایوں کا ایک بڑا ہجوم جو سخت مشتعل اور ہتھیاروں سے لیس ہے‘ مسلمانوں کی آبادی (جہاں ہم تھے) پر حملے کیلئے دوڑا چلا آرہا ہے‘ اتنے میں خوفناک شور کی آوازیں بھی ہم تک پہنچ گئیں۔ سارے گھر میں ہم چھ جوان لڑکیاں اور ایک خاتون تھیں جبکہ مردوں میں ایک بوڑھے چچا اور دو جوان لڑکے تھے‘ سب ایک دم سراسیمہ ہوگئے۔ یہ میرے چچا کے سالے کا گھر تھا جس کا بیرونی دروازہ بھی لکڑی کا تھا کہ ایک لات سے ٹوٹ سکتا تھا۔ طے یہ ہوا کہ چھت پر لکڑی کی سیڑھی لگا کر برابر والے گھر میں اتر جائیں کیونکہ ان کا گھر کافی محفوظ تھا اور گیٹ کم از کم لوہےکا تھا۔ اس عجلت میں ہم سب بڑی مشکل سے پڑوسیوں کے ہاں چلے گئے۔ مرد چھت پر اینٹوں سے مورچے بنانے لگے اور پتھر اکٹھا کرنے لگے جب ہم نیچے گئے تو وہاں بہت سی خواتین و کمسن و نوعمر لڑکیاں موجود تھیں جو سب خوفزدہ ہوکر رو رہی تھیں میں نے کہا سب نماز میں لگ جاؤ اور قرآن پڑھو اور دعا کرو۔ ہم سب اس میں لگ گئے۔ ہجوم بس گلی میں داخل ہونے کے قریب تھا کہ اچانک مجھے بھابی کے بتائے ہوئے اسماء الحسنیٰ یاد آئے میں نے سب سے کہا باآواز بلندیاحَفِیْظُ یَاسَلَامُ  کا ورد کریں اور کمرہ اس ورد سے گونج اٹھا۔ ابھی ہمیں چند سیکنڈ ہی ہوئے تھے کہ اچانک ہجوم کی آوازیں ہلکی ہوکر غائب ہوگئیں۔ اوپر سے کسی نے آکر اطلاع دی کہ پتہ نہیں کیا معجزہ ہوا ہجوم ایسا ایک دم غائب ہوا کہ سب حیرت میں پڑگئے اور کمرے میں یہ سن کر ایک حیرت و شکر و اللہ سے سرشاری کے احساس سے سکوت طاری ہوگیا۔ اللہ اللہ۔۔۔ سبحان اللہ!بس وہ دن ہے اور آج کا دن بائیس سال ہوچکے ہیں یہ وظیفہ میرے دل و زبان کا حصہ بن چکا ہے‘ جو ملتا ہے اسے بتاتی ہوں‘ پچھلے دنوں اپنی دوست کے ساتھ گاڑی میں بیٹھی تھی گن پوائنٹ پر انگوٹھیاں اتروائیں میں نے دل میں ورد شروع کیا اور ڈاکو میرے ہاتھ میں انگوٹھیاں واپس پھینک کر چلا گیا اس کے علاوہ بھی ایسے برکات و فیوض حاصل ہوئے کہ طوالت کے باعث احاطہ تحریر میں لانا مشکل ہے۔ اس کے ساتھ ایک ضروری نسخہ بھی بتانا چاہتی ہوں کہ خون جو رک نہ رہا ہو اس پر فوراً مٹی کا تیل لگالیں فوراً رک جائےگا۔

 

Page No.16 Ubqari Magazine February 2015

Ubqari Magazine February 2015


Page No.17 Ubqari Magazine February 2015

Page 17 Ubqari Magazine February 2015


Page No.18 Ubqari Magazine February 2015
Ubqari Magazine February 2015 Page 18


Page No.19 Ubqari Magazine February 2015
Ubqari Magazine February 2015


Page No.20 Ubqari Magazine February 2015

Ubqari Magazine February 2015

Page No.21 Ubqari Magazine February 2015
Hazrat Allama Lahoti Ka Jawab

Page No.22 Ubqari Magazine February 2015

Allama Lahoti


Page No.23 Ubqari Magazine February 2015

Ubqari February 2015


Page No.24 Ubqari Magazine February 2015

Ubqari Magazine February 2015


Page No.25 Ubqari Magazine February 2015

Ubqari Magazine February 2015



----Page No.26 Ubqari Magazine February 2015

Ubqari Magazine February 2015

Page No.27 Ubqari Magazine February 2015

Ubqari Magazine February 2015

Page No.28 Ubqari Magazine February 2015

Ubqari Magazine February 2015

Page No.29 Ubqari Magazine February 2015

Ubqari Magazine February 2015

Page No.30 Ubqari Magazine February 2015

Ubqari Magazine February 2015

--------------------Page No.31 Ubqari Magazine February 2015

Ubqari Magazine February 2015
Page No.32 Ubqari Magazine February 2015
Ubqari Magazine February 2015

Page No.33 Ubqari Magazine February 2015

Ubqari Magazine February 2015

Page No.34 Ubqari Magazine February 2015

Ubqari Magazine February 2015




Page No.35 Ubqari Magazine February 2015

Ubqari Magazine February 2015

Page No.36 Ubqari Magazine February 2015

Page No.37 Ubqari Magazine February 2015

Ubqari Magazine February 2015 

Page No.38 Ubqari Magazine February 2015

Ubqari Magazine February 2015

Page No.39 Ubqari Magazine February 2015

Ubqari Magazine February 2015

Page No.40 Ubqari Magazine February 2015


Jinnat Ka Paidisi Dost

-Page No.41 Ubqari Magazine February 2015

-----
Ubqari Magazine February 2015

Page No.42 Ubqari Magazine February 2015

Ubqari Magazine February 2015

Page No.43 Ubqari Magazine February 2015

Page No.44 Ubqari Magazine February 2015

Ubqari Magazine February 2015

Page No.45 Ubqari Magazine February 2015

Ubqari Magazine February 2015

------

Page No.46 Ubqari Magazine February 2015

Ubqari Magazine February 2015



  Page No.47 Ubqari Magazine February 2015

Ubqari Magazine February 2015

Page No.48 Ubqari Magazine February 2015

Ubqari Magazine February 2015

Page No.49 Ubqari Magazine February 2015

Ubqari Magazine February 2015

Back Page Ubqari Magazine February 2015

Ubqari Magazine 2015

------------------------

https://plus.google.com/u/0/108805496694940160680/posts   https://www.facebook.com/ubqarimagazinelahore  
http://www.dailymotion.com/ubqarivideos

http://majalismajzoobiubqari.blogspot.com/

-------------------------------------------------------------------

Ubqari January 2015

 Ubqari January 2014

---------------------------------------------------

Download Ubqari Magazine February 2015 PDF


No comments:

Post a Comment